دوہزار اٹھارہ میں خارجہ پالیسی کی حصولیابیاں


سال 2018 میں صدر جمہوریہ ،نائب صدر، وزیر اعظم اور وزیر خارجہ کی سطح پر 56 ممالک کے 73 دورے کئے گئے جبکہ عالمی رہنماؤں نے ہندوستان کے 44 دورے کئے۔ ان میں تقریباً نصف دوروں میں ایشیا ءپر توجہ مرکوز کی گئی جن  میں ہندوستان کی خارجہ پالیسی کے…

عمران  کے ‘نئے پاکستان’  میں میڈیا پر قدغن


ویسے تو پاکستان میں مختلف ادوار میں کسی نہ کسی بہانے سے میڈیا پر یلغار ہوتی رہی اور سویلین اور فوجی دونوں طرح کی حکومتوں نے پریس کو پا بہ زنجیر کرنے کی کوشش کی۔ پاکستان کے ایک ممتاز صحافی مرحوم ضمیر نیازی نے اردو اور انگریزی میں متعدد کتابیں…

پاکستان پر فائنانشیل ایکشن ٹاسک فورس کی نگرانی


اس بات کے آثار کم ہی نظر آتے ہیں کہ حکومت پاکستان دہشت گرد گروپوں کے خلاف کوئی ایسی کارروائی کرے گی جو پڑوسی ملکوں میں عوامی استحکام پیدا کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ عمران خان نے حال ہی میں ممبئی پر ہونے والے 2008کے دہشت گردانہ حملوں کے حوالے…

چا بہار: امن اور خوشحالی کا نیا باب


ایران کے چا بہار میں بھارتی کمپنی انڈین پورٹس گلوبل لمیٹڈ کے پہلے دفتر کا کھلنا اور شہید بہشتی پورٹ کے کام  کاج اور انتظام کو اپنے ہاتھ میں لینا اس خطّے میں بھارت کے تجارتی منصوبوں اور بہتر روابط کے فروغ کی راہ میں سنگ میل کی حیثیت رکھتا…

بنگلہ دیش میں روہنگیا پناہ گزینوں کیلئے بھارت کی جانب سے راحتی سازوسامان کی فراہمی


بنگلہ دیش میں اس وقت انتخابی ماحول گرم ہے جہاں اس ماہ کی 30تاریخ کو عام انتخابات ہونے والے ہیں ۔تاہم انتخابات سے متعلق سارے کام روہنگیا پناہ گزینوں کے بحران کے سایہ میں ہو رہے ہیں۔ 2017میں جب روہنگیا پناہ گزینوں کا بحران پیدا ہوا تو بھارت اس سلسلہ…

افغانستان سے امریکی فوجوں کی واپسی اورجنوبی ایشیا پر اس کے مضمرات


افغانستان سے امریکی فوجیوں کی نصف تعداد کی واپسی کےلئے امریکی صدر ڈونل ٹرمپ کے فیصلے سے کابل حکومت کو زبردست دھچکا لگا ہے۔ اگست 2017 میں جنوب ایشیاء سے متعلق اپنی پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے ڈونل ٹرمپ نے کہا تھا کہ افغانستان میں امریکی فوجیوں کی تعداد میں…

اپنے گریبان میں جھانک لیں عمران خان


جمہوریت میں سیاسی اختلافات کو اہمیت حاصل ہوتی ہے ۔ حکومت اور اپوزیشن کے درمیان مختلف امور پر نہ صرف بات چیت اور بحث و مباحثہ ہوتا ہے بلکہ اکثر نوک جھونک بھی ہوتی رہتی ہے لیکن یہ سب کچھ اسی عمل کا حصہ ہوتا ہے جو جمہوریت سے عبارت…

امریکی فوجوں کی واپسی کے فیصلے پر ناٹو اتحادی حیرت زدہ


امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے بعض بیانات اور فیصلے اتنے غیر متوقع اور اچانک ہوتے ہیں کہ نہ صرف امریکہ میں ان پر حیرت ظاہر کی جاتی ہے بلکہ اکثر امریکہ کے اتحادی بھی نہ صرف چونک جاتے ہیں بلکہ ان کے خلاف سخت رد عمل کا بھی اظہار کرتے…

پاکستان کی مجروح ہوتی ساکھ،اسلام آباد کو غور و فکر کرنے کی ضرورت


 ابھی حال ہی میں واشنگٹن میں ایک فورم کے زیر اہتمام پاکستان میں انتخابات کے بعد کی صورت حال پر ایک کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ مذکورہ فورم جنوبی ایشیا میں دہشت گردی کی مخالفت اور انسانی حقوق کے فروغ کے لیے کام کرتا ہے۔ امریکہ اور سری لنکا میں…

بھارت اورنیپال کے درمیان مذہبی سیاحت کا فروغ


وزیراعظم نریندرمودی کے اس سال نیپال دورے کے دوران دونوں ملکوں کے درمیان رابطے کو فروغ دینے پر زور دیا گیا۔ اس کے علاوہ دونوں ملکوں کے رہنماؤں نے دو طرفہ تجارتی و معاشی تعاون کو فروغ دینے کے طریقہ کار پر بھی تبادلۂ خیال کیا۔ نئی دہلی اور کٹھمنڈو…