ریڈیو فیچر:محرّم اور گنگا جمنی تہذیب

حق پرستی، حق گوئی اور  ظلم کا مقابلہ یہ وہ مشترکہ اقدار ہیں جو دنیا کے تقریباً ہر ایک مذہب کی تعلیمات کا لازمی جزو ہیں۔ انسانی تاریخ کے اوراق پلٹ کر دیکھیں تو پتہ چلتا ہے کہ حق کے لئے قربانیاں دینے والے جیالوں کی تعلیمات کو ہمیشہ یاد رکھا گیا اور جب سب کچھ مٹادینے والوں کی بات چلتی ہے تو ذہن میں کربلا کا تصور ضرور آتا ہے۔

ہندوستان میں کشمیر سے کنیا کماری تک گوہاٹی سے گجرات تک عزاداری کی روایت قائم ہے اور یہاں ہر نسل، قوم، مذہب اور رنگ کے لوگ اس میں شامل ہوتے ہیں۔

ہندوستانی عزاداری پر گنگا جمنی تہذیب کا گہرا اثر ہے اور یہ رنگ عزاداری سے کربلائی ادب تک ہر جگہ نظر آتا ہے۔

ہمارا یہ دستاویزی خصوصی فیچر برج نرائن چکبست، روپ کماری، چھنولعل دلگیر اور حکیم چھنومل سے لیکر گردھاری پرساد باقی تک کے کربلائی ادب کا احاطہ کرتا ہے جو کہ محرم کے موقع پر نشر کیا گیا۔