شام میں خودکش حملے میں 23 افراد ہلاک، متعدد زخمی

جنوبی شام میں اردن سے متصل سرحد کے نزدیک ایک خودکش حملے میں کم از کم 23 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوگئے۔ شام کے انسانی حقوق سے متعلق نگراں ادارے نے کہا ہے کہ بمبار نے نصب سرحدی کراسنگ کے نزدیک جیش الاسلام کے ذریعے استعمال کئے جانے والے ایک اڈے پر جمعہ کو ایک دھماکہ خیز بیلٹ سے دھماکہ کیا۔ ادارے کا کہنا ہے کہ ہلاک ہونے والے زیادہ تر لوگوں کا تعلق جیش الاسلام سے ہے۔ ادارے کے سربراہ رمی عبدالرحمان کا کہنا ہے کہ اس دھماکے میں زخمی ہونے والے درجنوں لوگوں میں سے 20 کی حالت نازک ہے۔ فوری طور پر کسی نے بھی اس دھماکے کی ذمے داری قبول نہیں کی ہے، لیکن میڈیا اطلاعات کے مطابق یہ حملہ داعش سے تعلق رکھنے والے جہادیوں نے کیا ہے۔