اقتصادی جائزہ میں ساڑھے سات فیصد شرح ترقی حاصل کرنا دشوار

پارلیمنٹ میں جمعہ کو سال 2016-17 کے اقتصادی سروے کا دوسرا حصہ پیش کیا گیا۔ اس میں کہا گیا ہے کہ روپے کی قدر میں اضافے، زرعی قرضوں کی معافی اور جی ایس ٹی کے نفاذ سے پیدا ہونے والے چیلنجوں کی وجہ سے پونے سات سے لے کر ساڑھے سات فیصد کی شرح ترقی حاصل کرنا دشوار ہوگا جس کا پہلے اندازہ لگایا گیا تھا، البتہ سروے میں بھارتی معیشت میں ڈھانچہ جاتی اصلاحات پر پُرامیدی کا اظہار کیا گیا ہے، جس میں مختلف عوامل کا اہم رول ہے۔ ان میں جی ایس ٹی کا آغاز، نوٹوں کی منسوخی کا مثبت اثر اور توانائی کے شعبے میں سبسڈی کو مزید معقول بنانا شامل ہے۔