بی آر ڈی میڈیکل کالج گورکھپور میں بچوں کی اموات، تحقیقات کیلئے کمیٹی تشکیل

اترپردیش سرکار نے بی آر ڈی میڈیکل کالج گورکھپور میں آکسیجن سلنڈرز کی کمی کے سبب کچھ مریضوں کی ہلاکت کے بارے میں میڈیا کے ایک سیکشن میں آنے والی خبروں کی تردید کی ہے۔ ریاستی سرکار نے میڈیکل کالج میں بچوں کی موت کی میڈیا اطلاعات کے دوران ایک پریس ریلیز میں اس کی وضاحت کی، البتہ ضلع مجسٹریٹ اسپتال میں خیمہ زن ہیں تاکہ اس معاملے کا جائزہ لے سکیں۔ اسی سے متعلق ایک واقعہ میں اترپردیش سرکار نے اس بات کو یقینی بنانے کے لئے ایک کمیٹی بنائی ہے کہ کیا میڈیکل کالج میں بچوں کی اموات میں کوئی کوتاہی سرزد ہوئی ہے۔

ہمارے نامہ نگار کے مطابق ریاست کے وزیرمملکت سدھارتھ ناتھ سنگھ نے بی آر ڈی میڈیکل کالج گورکھپور میں کسی بھی بچے کی موت، آکسیجن کی کمی سے ہونے کے حادثے سے انکار کیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ کالج میں سات اگست سے لے کر اب تک 60 بچوں کی موت مختلف امراض کی وجہ سے ہوئی ہے۔ ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ گورکھپور نے بچوں کی اموات کی اصلی وجوہات کو جاننے کے لئے مجسٹریٹی جانچ شروع کردی ہے۔ انھوں نے کہا ہے کہ بچوں کی موت کی وجوہات کا پتہ لگایا جارہا ہے اور قصوروار لوگوں کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔ اسپتال میں آکسیجن کی کمی ہونے سے انکار کرتے ہوئے ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ نے کہا کہ اس کا متبادل انتظام مقامی نرسنگ ہوم اور پڑوسی سنت کبیرنگر ضلع میں کردی گئی تھی۔