لڑکیوں کو سفارتی مشنوں کی ایک روزہ علامتی ذمہ داری

’’راجدھانی میں لڑکیوں کو سفارتی مشنوں کی ذمہ داری‘‘ یہ سرخی روزنامہ اسٹیٹس مین کی ہے۔ اپنی خبر میں اخبار رقمطراز ہے کہ کَل بچیوں کے بین الاقوامی دن کے موقع پر 23لڑکیوں نے راجدھانی دہلی کے 12 سفارت خانوں اور ہائی کمیشنوں کا ایک دن کے لئے علامتی چارج سبنھالا۔ اخبار نے لکھا ہے کہ اس پروگرام کا انعقاد غیر سرکاری تنظیم پلان انڈیا نے ہندوستان میں یوروپی یونین، کینیڈا ہائی کمیشن اور دیگر سفارتی مشنوں کے اشتراک سے کیا تھا جس کا مقصد اس غیرسرکاری تنظیم کے پلیٹ فارم سے لڑکیوں کو ایک دن کے لئے بڑی ذمہ داریوں سے متعارف کرانا تھا۔ یہ پیش قدمی پلان انڈیا کی اس کوشش کاحصہ تھی جس کا مقصد، لڑکیوں کے خلاف پابندیوں کو توڑنا تھا جن کی وجہ سے وہ اعلیٰ مواقع کے حصول میں معاشرے میں پیچھے رہ جاتی ہیں۔ اخبار نے پلان انڈیا کی ایگزیکٹیو ڈائریکٹر بھاگیہ شری کے حوالے سے لکھا ہے کہ گزشتہ کئی دہائیوں میں نمایاں پیش رفت کے باوجود مساوی شراکت کے لئے خلا ہنوز موجود ہے۔ دن کے اختتام پر ایک بڑے اجتماع کا انعقاد کیا گیا جس میں منتخبہ لڑکیوں اور متعلقہ مشن کے سربراہوں کے درمیان تجربات کا تبادلہ ہوا لڑکیوں نے اپنے تجربات بیان کرتے ہوئے کہا کہ ان کا یہ یقین پختہ ہوگیا ہے کہ لڑکیاں  ہرکام کرسکتی ہیں۔ اس موقع پر پلان انڈیا نے  ’ان لاک دی پاور آف گرلس‘ کے زیر عنوان ایک رپورٹ بھی جاری کی۔