امریکہ ایٹمی سپلائر گروپ میں بھارت کی رکنیت کےلیے ساتھی ملکوں کیساتھ ملکر کام کررہا ہے:واشنگٹن

امریکہ نے کہا ہے کہ وہ بھارت کو نوکلیائی سپلائرس گروپ کی رکنیت دلانے کے لیے گروپ ممالک کے ساتھ کام کررہا ہے۔ بھارت میں امریکی سفیر جناب کینتھ جسٹر نے نئی دلّی میں عہدے کی ذمہ داری سنبھالنے کے بعد اپنے پہلے خطاب میں کہا کہ بھارت اور امریکہ کو ایک مضبوط /دیرپا، لچکدار اور حالات سے موافقت پیدا کرنے کی صلاحیت پر مبنی شراکت داری قائم کرنی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت /بحرالکاہل خطے کی ایک نمایاں طاقت ہے اور دونوں ممالک کے لیے بھارت بحرالکاہل خطہ امریکہ اور بھارت کے عوام کے ساتھ ساتھ دوسروں کی خوشحالی اور سیکورٹی کے لحاظ سے نہایت اہم ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان اور امریکہ دونوں نے بھیانک دہشت گردانہ حملوں کا سامنا کیا ہے اور دونوں ممالک کے اس لعنت کو جڑ سے ختم کرنے میں مضبوط آپسی مفادات وابستہ ہیں۔

جناب جسٹر نے کہا کہ صدر ٹرمپ نے واضح کردیا ہے کہ امریکہ کہیں بھی سرحد پار کی دہشت گردی یا دہشت گردوں کو محفوظ ٹھکانے فراہم کرنے کو برداشت نہیں کرے گا۔ جناب جسٹر نے مزید کہا کہ امریکہ سمجھتا ہے کہ پوری طرح آزاد اور صاف ستھری تجارت سے وزیراعظم نریندر مودی کی ان کوششوں کو حوصلہ ملے گا جس کا مقصد بھارت کی طویل مدتی ترقی کی شرح کو ایک ٹھوس انداز میں بہتر بنایا ہے۔