پاکستان کو سنجوان پر حملے کی قیمت چکانا پڑے گی: نرملا سیتا رمن

روزنامہ ٹری بیون نے سنجوان فوجی اڈے پرحالیہ حملے کے  حوالے سے وزیر دفاع نرملا سیتا رمن کا بیان شائع کیاہے جس میں انہوں نے پاکستان کو واضح الفاظ میں ذمہ دار ٹھہراتے ہوئے کہا ہے کہ اس کے لئے اس کو زبر دست قیمت چکانی پڑے گی۔ وزیر موصوف نے یہ بیان پیر کے روز جموں کے دورے کے موقع پر دیا جہاں وہ سلامتی کی صورتحال کا جائزہ لینے اور اس حملے میں زخمی فوجیوں اور شہریوں سے ملاقات کے لئے گئی ہیں۔ اخبار نے نرملا سیتا رمن کے حوالے سے مزید تحریر کیا ہے کہ خفیہ رپورٹوں سے معلوم ہوتا ہے کہ ان دہشت گردوں کی کمان سرحد پار بیٹھے ان کے آقاؤں کے ہاتھوں میں ہے ۔ نیز یہ کہ پاکستان ،پیر پنجال کے جنوبی علاقوں میں دہشت گردی کو فروغ دے رہا ہے اور در اندازی میں مدد دینے کے لئے جنگ بندی کی بار بار خلاف ورزیاں کر رہا ہے ۔ پاکستان کی سخت مذمت کرتے ہوئے انہوں نے مزید کہا کہ شواہد کے انبار کی فراہمی کے باوجود پاکستان نے دہشت گردوں کے خلاف کارروائی نہیں کی ہے ۔ اس کے بجائے اس نے ممبئی حملوں کے ذمہ دار افراد کو اپنی سر زمین پر کھلے بندوں گھومنے کی آزادی دے رکھی ہے ۔ فوجی اسٹیشن پر حملہ کرنے والے دہشت گردوں کا تعلق جیش محمد سے ہے جس کو پاکستان میں سر گرم اظہر مسعود پوری امداد دے رہا ہے