آربی آئی کے دوماہی مالی پالیسی جائزے میں سبھی اہم پالیسی شرح جوں کا توں

ریزرو بینک آف انڈیا (آر بی آئی) نے اعلان کئے گئے پانچویں دو ماہی مالی پالیسی جائزے میں سبھی اہم پالیسی شرحوں کو جوں کا توں رکھا ہے۔اس کے نتیجے میں ریپوریٹ میں کوئی تبدیلی نہیں ہوئی ہے اور یہ ساڑھے چھ فیصد پربرقرار ہے جبکہ ریورس ریپوریٹ کو سوا چھ فیصدپر برقراررکھا گیا ہے۔ریپوریٹ وہ شرح ہے جس پرآر بی آئی بینکوں کو قرضے دیتا ہے۔ جبکہ ریورس ریپو وہ شرح ہے ،جس پر آر بی آئی بینکوں سے رقم لیتا ہے۔آر بی آئی نے مطلع کیا کہ مارجینل اسٹینڈنگ فیسلٹی شرح اور بینک ریٹ بھی چھ اعشاریہ سات پانچ فیصد پر برقرار ہیں۔آر بی آئی کے گورنراُرجت پٹیل کی سربراہی میں چھ رکنی مالی پالیسی کمیٹی نے پالیسی شرحوں کو جوں کا توں برقرار رکھنے کا اتفاق رائے سے فیصلہ کیا ہے۔ اکتوبر میں پچھلے پالیسی اعلان میں آر بی آئی نے پالیسی شرحوں میں کوئی تبدیلی نہیں کی تھی۔نشوونما کے سلسلے میں آر بی آئی نے اس مالی سال کے لئے جی ڈی پی کی ترقی کی شرح کا تخمینہ سات اعشاریہ چار فیصد جبکہ 20-2019کے نصف میں ساڑھے سات فیصد لگایا ہے۔مالی پالیسی کمیٹی کی اگلی میٹنگ پانچ اورسات فروری 2019 کے درمیان ہوگی۔