یونانی وزیر دفاع کا استعفیٰ

یونان کے وزیر دفاع پنوس کمّے نوز نے ایک سمجھوتے کے خلاف احتجاج میں اپنے استعفے کا اعلان کیا ہے۔ مقدونیا کے نام سے متعلق اس سمجھوتے سے لمبے عرصے سے جاری تنازعہ ختم ہو جائے گا۔ کمّے نوز نے کہا کہ وہ اپنی دائیں بازو کی انڈپنڈنٹ گریک پارٹی کو وزیر اعظم الیگزز تسیپرا کی بائیں بازو کی سائیریزا کے ساتھ اتحاد سے الگ کر رہے ہیں کیونکہ یہ دونوں پارٹیاں مقدونیا کے تنازعے پر متفق نہیں ہو سکتیں۔
مقدونیا کی پارلیمنٹ نے جمعہ کو بلقان کے اس ملک کا نام جمہوریہ شمالی مقدونیا رکھنے کے سلسلے میں ایک آئینی ترمیم کو منظوری دی تھی۔ امید ہے کہ یونان کی پارلیمنٹ، نام تبدیل کیے جانے سے متعلق اس معاہدے کی توثیق کر دے گی، جس کے بعد مقدونیا کے، یورپی یونین اور ناٹو میں داخلے کیلئے ویٹو ختم ہو جائیگا۔