ذہنی مرض میں مبتلا قیدیوں کو تختۂ دار پر نہ لٹکائے جانے کا پاکستان سے مطالبہ

اقوام متحدہ کے ماہرین نے پاکستان پر زور دیا ہے کہ وہ ذہنی امراض میں مبتلا قیدیوں کو منمانے طریقے پر تختۂ دار پر نہ چڑھائے۔ پاکستان کی سپریم کورٹ نے 55سالہ خضر حیات کو پھانسی دیے جانے سے محض تین دن پہلے اس کی پھانسی کو معطل کردیا تھا۔ سرکاری ڈاکٹروں نے بتایا تھا کہ وہ 2008سے دماغی امراض میں مبتلا ہے۔ حیات کو 2003 میں اپنے ایک ساتھی کو قتل کرنے کے الزام میں پھانسی کی سزا سنائی گئی تھی۔