لوک سبھا انتخابات کے دوسرے مرحلے کی انتخابی مہم عروج پر

لوک سبھا انتخابات کے دوسرے مرحلے کی چناؤ مہم اپنے عروج پر پہنچ گئی ہے کیونکہ انتخابی مہم ختم ہونے میں اب صرف دو دن رہ گئے ہیں۔ جمعرات کو دوسرے مرحلے میں 12 ریاستوں اور مرکز کے زیرانتظام ایک علاقے میں 97 حلقوں میں ووٹ ڈالے جائیں گے۔

مختلف سیاسی پارٹیوں کے سرکردہ رہنما ووٹروں کو راغب کرنے کی خاطر کوئی کسر نہیں چھوڑرہے ہیں۔

وزیراعظم اور بی جے پی کے سرکردہ لیڈر نریندرمودی نے کل جموں میں کٹھوعہ اور اترپردیش میں علی گڑھ اور مرادآباد میں ریلیوں سے خطاب کیا۔ جناب مودی نے کہا کہ ان کی سرکار نے دہشت گردی ، بدعنوانی اور غربت ختم کرنے کا تہیہ کررکھا ہے، جبکہ اپوزیشن پارٹیاں انھیں ہٹاناچاہتی ہیں۔

ادھر بی جے پی کے صدر امت شاہ آج گجرات میں گر سومناتھ میں ایک جلسہ عام سے خطاب کریں گے۔ وہ ریاست میں بناس کانٹھا میں ایک روڈ شو بھی کریں گے۔

کانگریس صدر راہل گاندھی آج اترپردیش میں آگرہ میں فتح پور سیکری حلقے میں ایک ریلی سے خطاب کریں گے۔

متھرا ، فتح پور سیکری، بدایوں، رام پور اور دیگر مقامات پر ریلیوں اور جلسوں میں بی جے پی کے رہنما شرکت کریں گے۔ ان میں راجناتھ سنگھ ، ڈاکٹر مہندرناتھ پانڈے اور مہیش شرما شامل ہیں۔

ادھر بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی علی گڑھ اور امروہہ میں جلسوں سے خطاب کریں گی جبکہ سماجوادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو کاس گنج اور مرادآباد میں چناؤ مہم میں حصہ لیں گے۔

ادھر کانگریس کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے کل آسام میں سلچر کے مقام پر ایک روڈ شو کیا ۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس نے آسام کو خصوصی درجہ دیا تھا لیکن بی جے پی نے اقتدار میں آنے کے بعد اسے ہٹادیا۔

دوسرے مرحلے میں تمل ناڈو کے سبھی 39 حلقوں میں ووٹ ڈالے جائیں گے۔ دیگر پارلیمانی حلقوں میں کرناٹک میں 14 ، مہاراشٹر میں 10 ، اترپردیش میں 8 ، آسام ، بہار اور اوڈیشہ میں 5-5 ، چھتیس گڑھ اور مغربی بنگال میں 3-3 ، جموں و کشمیر میں دو اور منی پور ، تریپورہ اور پدوچیری میں ایک ایک حلقے میں پولنگ ہوگی۔

543 رکنی لوک سبھا کے لئے پولنگ سات مرحلوں میں مکمل ہوگی۔ پہلے مرحلے میں 69 اعشاریہ چار تین فیصد ووٹنگ ریکارڈ کی گئی۔ سبھی مرحلوں کے بعد ووٹوں کی گنتی 23 مئی کو کی جائے گی۔